منگل ۲۲ اکتوبر۲۰۱۹

میڈیا ہٹ

جمعہ, ۰۵   جولائی ۲۰۱۹ | ۰۴:۴۹ صبح

پاکستان میں  رائج نظام محصولات جمہوریت کی روح کے منافی ہے کیونکہ اس میں غریب اور متوسط طبقہ ٹیکس دیتا ہے جبکہ مراعات اور سہولیات کا حقدار ٹھہرتا ہے امیر طبقہ۔ آمریت ہو یا جمہوری دور یہ روایت قائم و دائم ہے۔ حالیہ بجٹ میں اگرچہ انکم ٹیکس کی شرح میں اضافہ کیا گیا ہے اور حکومت اصرار کر رہی ہے کہ  بالواسطہ ٹیکسوں (جو بلاتفریق آمدنی و وسائل کے لگائے جاتے ہیں) کی مد میں ، سوائے چینی کے، کوئی اضافہ نہیں کیا گیا  لیکن  صورتحال میں تبدیلی اس وقت  آئیگی جب نہ  صرف بالواسطہ ٹیکسوں  کی شرح میں کمی آئیگی بلکہ  بااختیار مقامی حکومتوں کے ذریعے بنیادی ضروریات  اور سہولیات  بھی فراہم کی جائیں گی۔  اس تناظر میں بات کررہے ہیں میڈیا ہٹ کے میزبان ریاض مسن،  ماہرین  محمد احسن یاتو اور ڈاکٹر جمیل طاہر سے۔