ہفتہ ۲۴ اگست۲۰۱۹

پاکستان کی فضائی حدود بند ہونے کی وجہ سے بھارت ائیر لائن کو 550 کروڑ کا خسارہ

بدھ, ۱۷   جولائی ۲۰۱۹ | ۱۱:۳۶ صبح

سیرت فاطمہ:پاکستان کی فضائی حدود کھل گئی ہیں مگر بھارتی حکومتی کے مطابق بھارتی ائیر لائن کو550 کروڑ کا نقصان اٹھانا پڑا ہے۔

بین الاقوامی  خبر رساں ادارے ڈی ڈبلیو   کی رپورٹ کے مطابق مودی حکومت کا کہنا ہے کہ  پابندی کی وجہ سے دو جولائی تک ہی بھارتی ایئرلائنوں کو 550 کروڑ روپے سے زیادہ کا خسارہ ہو چکا تھا۔ پابندی ختم کیے جانے کے ساتھ ہی پاکستان کی فضائی حدود سے ہو کر بھارت جانے والی پروازوں کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے۔ ٹرکش ایئرلائنز کی ایک فلائٹ سب سے پہلے دہلی پہنچی۔ بھارتی وزارت شہری ہوا بازی کے ایک اعلیٰ افسر نے کہا، ‘‘پاکستان نے آج صبح سے اپنی فضائی حدود سے تمام طیاروں کو گزرنے کی اجازت دے دی ہے۔ بھارتی فضائی کمپنیاں اپنے طیاروں کو معمول کے روٹ سے ہو کر گزرنے کے لیے جلد ہی پاکستانی فضائی حدود کا استعمال شروع کردیں گی۔’’ یاد رہے کہ  بھارت کی جانب سے  فروری میں  جب پاکستان  کی   فضائی حدود کی  خلاف ورزی کی گئی  تو پاکستان کی جانب سے  فضائی حدود کو بند کر دیا گیا تھا ۔ بھارتی سول ایوی ایشن کے وفاقی وزیر ہردیپ سنگھ پوری نے گزشتہ دنوں بھارتی پارلیمان میں اس حوالے سے پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں کہا تھا کہ دو جولائی تک قومی ایئرلائن ایئر انڈیا کو 491 کروڑ روپے کا نقصان ہو چکا ہے جب کہ پرائیویٹ ایئرلائنز کمپنیاں اسپائس جیٹ، انڈی گو اور گو ایئر کو بالترتیب 30.73 کروڑ روپے، 25.1 کروڑ روپے اور 2.1 کروڑ روپے کا نقصان ہو چکا ہے۔

تبصرہ کریں