جمعرات ۲۲ اکتوبر۲۰۲۰

پاکستان انسانی حقوق کونسل کا دوبارہ رکن منتخب

بدھ, ۱۴   اکتوبر ۲۰۲۰ | ۱۰:۵۰ صبح

پاکستان بھاری اکثریت سے آئندہ تین سال کے لیے اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کا رکن منتخب ہو گیا ہے۔پاکستان نے 191 میں سے 169 ووٹ حاصل کیے ہیں۔

پاکستان نے اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے انتخابات میں ریکارڈ ووٹ حاصل کیے ہیں۔ کونسل کی 4 نشستوں کے لیے ایشیا پیسیفک خطے سے 5 امیدوار مد مقابل تھے جن میں سے پاکستان نے سب سے زیادہ ووٹ حاصل کیے۔ اپنے ایک بیان میں وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے اس ریکارڈ ساز کامیابی پر کہا ہے کہ پاکستان کو اتنی کثیرتعداد میں ووٹوں کا ملنا پاکستان کی پالیسیوں پر اعتماد کا اظہار ہے۔ وزیر خارجہ مخدوم شاہ قریشی کے مطابق پاکستان نے ہمیشہ عالمی فورمز پرانسانی حقوق کی پاسداری کے لیےآواز بلند کی ہے۔ وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ انسانی حقوق کونسل اقوام متحدہ  کا ایک انتہائی اہم فورم ہے۔ واضح رہے کہ پاکستان 2018 سے ایچ آر سی میں اپنی خدمات انجام دے رہا ہے جبکہ گزشتہ روز ہونے والے انتخاب میں پاکستان کو مزید 3 سال کے لیے رکن منتخب کرلیا گیا ہے، اس رکنیت کا آغاز یکم جنوری 2021 سے ہوگا۔ مزید یہ کہ 2006 میں انسانی حقوق کونسل کے قیام کے بعد سے پاکستان انسانی حقوق پر اقوام متحدہ کی اس سب سے اہم تنظیم کا پانچویں مرتبہ رکن منتخب ہوا ہے۔ واضح رہے کہ اقوام متحدہ کے اندر انسانی حقوق کونسل ایک بین الحکومتی تنظیم ہے جس کا صدر دفتر جنیوا میں ہے، یہ دنیا بھر میں انسانوں کے حقوق کے تحفظ اور انہیں فروغ دینے کے لیے ذمہ دار ہے، اس میں 47 ریاستیں شامل ہیں، جہاں انسانی حقوق کے موضوعات اور مقبوضہ کشمیر جیسے توجہ طلب مخصوص صورتحال پر تبادلہ خیال کیا جاتا ہے۔

تبصرہ کریں