جمعرات ۲۸ جنوری۲۰۲۱

عالمی ادارہ صحت کا کرونا وائرئس مزید پھیلنے کے خدشے کا اظہار

منگل, ۱۴   جولائی ۲۰۲۰ | ۰۲:۰۲ شام

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے کورونا وائرئس مزید پھیلنے کے خدشے کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ عالمی سطح پر صورت حال مسلسل بگڑتی جارہی ہے اور اگرجلد ہی ٹھوس اور واضح اقدامات نہیں کیے گئے تو آنے والے دنوں میں حالات بد سے بدتر ہوجائیں گے۔

  یہ انتباہ عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ڈاکٹر ٹیڈروس ایڈہانوم نے جنیوا میں  میڈیا سے ورچوول پریس کانفرنس سے خطاب میں کیا۔ انہوں نے چند ماہ میں موثر ویکسین تیار ہونے خبروں کو بھی مبینہ طور پر غلط  اور مستقبل قریب میں حالات معمول پر آنے کو خارج از امکان بھی قرار دیا۔ 

 

                      پریس کانفرنس میں موجود ڈبلیو ایچ او کی ایمرجنسی سروسز کے سربراہ مائیک ریان نے لاک ڈاون کی حمایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگرچہ اس سے ملکوں کو سخت اقتصادی نقصان اٹھانا پڑ رہا ہے لیکن بعض خاص مقامات پر کورونا وائرس کے انفیکشن کو پھیلنے سے روکنے کے لیے لاک ڈاون نہایت ضروری ہے۔

 

                                ڈبلیو ایچ او کے ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر ٹیڈروس ایڈہانوم نے کہا کہ اگرچہ یورپ اور ایشیا میں بہت سے ممالک میں اس وبا پر قابو پالیا گیا ہے تاہم بہت سے ملکوں میں یہ وبا تیزی سے پھیلتی جارہی ہے۔ انہوں نے تمام ممالک سے اس وبا پر قابو پانے کے لیے مشترکہ جامع لائحہ عمل اپنانے کی اپیل کی۔  جرمن خبر رساں ادارے ڈی ڈبلیو کے مطابق ڈبلیو ایچ او کے سربراہ نے  کہا کہ کورونا وائرس سے متاثرین کے نصف سے زائد نئے کیسیز اب امریکہ سے آرہے ہیں۔ انہوں نے اس وبا سے متعلق سیاسی رہنماؤں کے بیانات تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ان بیانات کی وجہ سے لوگوں نے اس وبا پر اعتبار کرنا چھوڑ دیا ہے۔ تاہم انہوں نے کسی کا نام لینے سے گریز کیا۔ 

 

                               ڈبلیو ایچ او کے سربراہ نے میبینہ طور پر یہ بھی کہا ہے کہ دنیا کے کئی ممالک کورونا سے نمٹنے کے معاملے میں غلط سمت میں جارہے ہیں۔ کورونا وائرس کے نئے کیسیز مسلسل بڑھ رہے ہیں اس سے ثابت ہوتا ہے کہ جن احتیاطی تدابیر اور اقدامات کی باتیں ہورہی ہیں ان پر عمل نہیں کیا جارہا ہے۔ ٹیڈ روس کا کہنا تھا کہ لوگوں کو اب بھی کورونا کو سب سے بڑا دشمن سمجھنا ہوگا مگر  دنیا کی متعدد حکومتوں کے رویے سے اس وبا کو حوالے سے ان کی عدم سنجیدگی ظاہر ہو ری ہیں۔ 

 

                                                                         اس وقت دنیا میں کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد ایک کروڑ 30 لاکھ سے زائد بتائی جاتی ہے جن میں سے پانچ لاکھ سے زائد اس بیماری کی وجہ سے موت کا شکار ہو چکے ہیں۔                                          مائیک ریان نے دنیا بھر کی حکومتوں سے اپیل کی کہ وہ واضح اورٹھوس لائحہ عمل اختیار کریں۔ انہوں نے شہریوں سے بھی اس وبا کی سنگینی کو سمجھتے ہوئے ان کی طرف سے دی گئی ہدایات پر عمل کرنے کی اپیل کی۔   

تبصرہ کریں