ہفتہ ۲۴ اگست۲۰۱۹

امریکی ادارے ناسا کا اپنی ٹیم میں ایک خاتون کو شامل کرنےکا فیصلہ

بدھ, ۱۰   جولائی ۲۰۱۹ | ۰۲:۴۸ شام

نادیہ اختر:امریکی خلائی ادارے ناسا نے اپنےمشن انسان برادر میں پہلی بارایک عورت کو شامل کرنے کا فیصلہ کر لیاہے۔

واشنگٹن نیٹ نیوز کے مطابق 2024  میں امریکہ اپنی سیٹلایٹ  چاند پر بھیجے گا اسی مشن میں امریکی خلای ادارے ناسا میں پہلی بار خاتون شامل ہوں گی ۔چاند پر جانے والی خاتون  کاbابھی تک فیصلہ نہیں ہو سکا البتہ اس ادارے میں کام کرنے والی 12خواتین میں سے ہی کسی ایک کو اس مشن پر جانے کیلئے منتخب کیا جائے گا۔ ان خواتین میں فوجی پائلٹ این مکلین،انٹرنیشنل اسپیس مین زمیداریاں انجام دینے الی کرسٹینا کوک ،ناسا میں موجود خلا باز جیسیکا مائر اور سابقہ ائر فورس پائلٹ نکول میں زیادہ نمایاں ہیں۔امریکی خلائی ادارے نے  ٹی دی آر ایس ایم  سلسلے کا تیرہواں ٹریکنگ سیٹلائٹ خلا میں چھوڑنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔یہ سیٹلایٹٹریننگ اور ڈیٹاریلے سیٹلائٹ  نیٹ ورک کا حصہ ہے اور مواصلاتی مقاصد کیلئے اسے استعمال کیا جاتا ہے۔ایسے سیٹلائیٹ کی مدد سے خلا نوردوں کو زمین سے رابطہ رکھنے میں مدد ملتی ہے۔اس کے زریعے 22 ہزار 300 میل اونچائی پر موجود بین الاقوامی خلائی اسٹیشن اور مداروں میں موجود دوسرے سیاروں سے رابطے میں رہتی ہے۔

تبصرہ کریں